ہم پہ ساقی کی عنایت سے جلے جاتے ہیں - غزل

To read in English (Roman) and Hindi (Devanagari), click here.

Urdu poetry - Yaad aa jati hain besaakhta baten unki

ہم پہ ساقی کی عنایت سے جلے جاتے ہیں
یہ جو اَب تک کفِ افسوس ملے جاتے ہیں
یاد آ جاتی ہیں بے ساختہ باتیں ان کی
بے سبب ہونٹ تبسم میں ڈھلے جاتے ہیں
وقتِ رخصت کی پس و پیش انہیں کیا معلوم
دل رکا جاتا ہے جانے سے ولے جاتے ہیں
رفتہ رفتہ دمِ آخیر بھی آ پہنچے گا
رات دن وصل کے وعدوں پہ ٹلے جاتے ہیں
جائیے کچھ نہیں کہتے، جو ہوا ہے سو ہوا
سارے الزام مقدر کے گلے جاتے ہیں
ضبطِ گریہ میں شکیبؔ آپ نے پایا ہے کمال
ان کی گلیوں سے بھی چپ چاپ چلے جاتے ہیں

شکیبـؔ احمد
(اپریل ۲۰۲۰)

الفاظ و معانی

کفِ افسوس ملنا : افسوس کرتے ہوئے ہتھیلیوں کو ملنا |  hand wrung in distress
عنایت : کرم، نوازنا | blessings
تبسم : مسکراہٹ | smile
پس و پیش : آگے پیچھے ہونا، جھجک، ہچکچاہٹ | hesitation, indecision
ولے : لیکن, yet, however
ضبطِ گریہ : رونے پر قابو پانا، آنسو نہ نکلنے دینا | holding back tears

تبصرے

ایک تبصرہ شائع کریں

مشہور اشاعتیں

نگہِ من - میرا فلسفہ

میری شاعری